اردو کی برقی کتابیں

صفحہ اولکتاب کا نمونہ پڑھیں


دیوارِ ہوا پر آئینہ

جمشید مسرور


ڈاؤن لوڈ کریں 

   ورڈ فائل                                                                          ٹیکسٹ فائل

نظمیں

***

ابھی سب کچھ نہیں دیکھا

ابھی سب کچھ نہیں سمجھا

کچھ ایسا ہے کہ جیسے ایک گہری سانس لے کوئی

سزا دینے سے پہلے

سنگِ خاموشی کو یا سر سے گرا دینے سے پہلے

٭٭٭

خوشی میں غم کی بھی اک داستاں ہے

خوشی سے ہی جو پیدا ہے خوشی میں ہی نہاں ہے

مجھے معلوم ہے اک رازِ سر بستہ

جہاں پر موجِ دریا کے پلٹنے کی زمیں ہے

وہاں سے واپسی کا کوئی رستہ نہیں ہے

وہاں میں جا چکا ہوں۔ جا چکا ہوں

لبِ دریا سے ہو کر آ چکا ہوں

وہاں پر وقت کم ہے انتظار اک سعی لا حاصل

وہاں پر کوشش بے اختیار اک سعی لاحاصل

وہاں جو کچھ بھی ہے طے ہو چکا ہے

***

پھر درختوں نے گرائے خاک پہ پتے تمام

آسماں اپنا اٹیچی بند کر کے چل دیا

کوئی جیسے ایک ٹھنڈی آہ بھر کے چل دیا

کس کے سینے میں کہیں تلوار ٹوٹی دیکھنا

روشنی سی بند دروازے سے پھوٹی دیکھنا

کون ہے اس بند کمرے میں کہیں میں تو نہیں

ہاں یہ میری نرسری ہے جس میں کھڑکی کے قریب

رفتہ رفتہ روشنی میں ڈھل رہا ہوں دیکھنا

گھر میں کوئی بھی نہیں بس کچھ کھلونے ہیں مرے

جن کو سینے سے لگائے جل رہا ہوں دیکھنا

ڈاؤن لوڈ کریں 

   ورڈ فائل                                                                          ٹیکسٹ فائل

پڑھنے میں مشکل؟؟؟

یہاں تشریف لائیں۔ اب صفحات کا طے شدہ فانٹ۔

   انسٹال کرنے کی امداد اور برقی کتابوں میں استعمال شدہ فانٹس کی معلومات یہاں ہے۔

صفحہ اول